UK News

مانچسٹر (ہارون مرزا) برطانیہ نے اپنی سرحدوں پر حفاظتی اقدامات سخت کرنے کی پالیسی کے تحت برطانیہ میں داخل ہونے والے مسافروں کیلئے اگلے ماہ سے نئے ای ٹی اے ٹریول پرمٹ متعارف کرانے کا اعلا ن کر دیا۔
برطانیہ آنے والے مسافروں کو جلد ہی ٹریول پرمٹ کی ضرورت ہوگی کیونکہ برطانوی حکومت نے ملک کی سرحدیں سخت کردی ہیں۔ اکتوبر میں نئی ای ٹی اے (الیکٹرانک ٹریول آتھرائزیشن) اسکیم اگلے مہینے سفر کرنے کا ارادہ رکھنے والے لوگوں کیلئے شروع ہوگی۔ 2024کے آخر تک تمام بیرون ملک مقیم ممالک کو شامل کرنے تک نئے ممالک شامل کئے جائیں گے۔ ای ٹی اے برطانیہ کے ای ٹی آئی اے ایس اجازت نامے کے برابر ہے جس کی 2024سے یورپی یونین میں داخلے کے لیے ضرورت ہوگی۔ ای ٹی اے کو کسی فرد کے پاسپورٹ سے الیکٹرانک طور پر منسلک کیا جائے گا اور برمنگھم لائیو رپورٹس کے مطابق اسے برطانیہ میں سفر کرنے کی اجازت دی جائے گی۔ ہوم آفس نے کہا کہ حکومت کی اولین ترجیح برطانیہ کو محفوظ رکھنا ہے ہماری سرحد کی حفاظت کو مضبوط بنانے اور سفر کو بہتر بنانے کے لیے یو کے ایک الیکٹرانک ٹریول اتھرائزیشن اسکیم شروع کر رہا ہے ایک ڈیجیٹل اجازت جو کہ برطانیہ کے سفر کی اجازت ہوگا،ای ٹی اے اسکیم بڑے پیمانے پر ان زائرین کے لیے ہے جنہیں یو کے میں مختصر قیام کے لیے ویزا کی ضرورت نہیں ہے، یا جن کے پاس سفر سے پہلے سے ہی یو کے امیگریشن کی حیثیت نہیں ہے ای ٹی اے کے لیے درخواست دینے والے اپنی سوانح حیات، بائیو میٹرک اور رابطے کی تفصیلات فراہم کریں گے، مناسب سوالات کے مختصر سیٹ کے جواب دیں گے اس سے برطانیہ آنے کے خواہشمندوں کے بارے میں ہمارے علم میں اضافہ ہوگا اور ان لوگوں کی آمد کو روکا جائے گا جو خطرہ پیش کرتے ہیں آپ کو سیاحت، خاندان اور دوستوں سے ملنے، کاروبار یا مطالعہ کیلئے چھ ماہ تک برطانیہ آنے کے لیے ای ٹی اے کی ضرورت ہوگی آپ کو ورکرکریٹو ویزہ کی رعایت پر تین ماہ تک کیلئے یوکے آنے اور یوکے کے ذریعے ٹرانزٹ کیلئے بھی اس کی ضرورت ہوگی بشمول اگر آپ یوکے بارڈر کنٹرول سے نہیں جا رہے ہیں اگر آپ قطر کے شہری ہیں تو اگر آپ 15 نومبر 2023 کو یا اس کے بعد برطانیہ کا سفر کر رہے ہیں تو آپ کو ای ٹی اے کی ضرورت ہوگی آپ 25اکتوبر سے درخواست دے سکیں گے اگر آپ بحرین، اردن، کویت، عمان، سعودی عرب یا متحدہ عرب امارات کے شہری ہیں تو اگر آپ 22 فروری 2024 کو یا اس کے بعد برطانیہ کا سفر کر رہے ہیں تو آپ کو نئے پابندی کا سامنا کرنا ہوگااگر آپ کسی دوسرے ملک کے شہری ہیں، تو آپ کو ابھی درخواست دینے کی ضرورت نہیں اسکیم میں مزید قومیتوں کو بعد میں شامل کیا جائے گا ہوم آفس کا کہنا ہے کہ ای ٹی ایزقطر، بحرین، کویت، عمان، متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب کے شہریوں کیلئے الیکٹرانک ویزا ویورزکی جگہ لے لیں گے جس کیلئے اس وقت خلیج تعاون کونسل کی ریاستوں کے زائرین کو ایک ہی دورے کے لیے 30پائونڈ ادا کرنے کی ضرورت ہے برطانیہ ای ٹی ایز دو سال کی مدت میں سستے اور کثیر استعمال ہوتے ہیں اس میں کہا گیا ہے کہ 2024 کے آخر تک یہ اسکیم دنیا بھر میں ان زائرین کے لیے لازمی ہوگی جنہیں مختصر قیام کے لیے ویزا کی ضرورت نہیں ہے بشمول یورپ سے آنے والے افراد سرفہرست ہوں گے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *